Health Tips Symptoms and Treatment

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil

ملاوٹ شدہ دودھ زہر قاتل

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil

ملاوٹ شدہ دودھ زہر قاتل

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English

ربیعہ شبیر
غذائی اعتبار سے بہت زیادہ اہمیت کے حامل ہونے کے باعث دودھ اور اس سے تیار شدہ اشیاء انسانوں کی خوراک کا ایک اہم جزو ہیں ۔دودھ میں پروٹین ،فیٹ کاربوہائیڈریٹ ،وٹامنز اور منرلز وافر مقدار میں پائے جاتے ہیں دودھ چھوٹے بچوں اور زیادہ عمر کے افراد کیلئے مفید غذا تصور کیا جاتا ہے کیونکہ یہ آسانی سے ہضم ہو جاتا ہے ۔


دودھ میں نو عمر افراد کی بڑھوتری کے لیے ضروری امائنو ایسڈز بھی کافی مقدار میں موجود ہوتے ہیں غرضیکہ دودھ تمام عمر اور جنس کے افراد کے لیے بہترین غذا ہے۔دودھ میں پایا جانے والا منرل کیلشےئم ہڈیوں کی بڑھوتری اور مضبوطی کے لیے بہت اہم کردار ادا کرتا ہے ۔پاکستان اس وقت دنیا میں دودھ کی پیداوار کے لحاظ سے چوتھا بڑا ملک ہے یہاں دودھ کی پیداواری صلاحیت تقریباً 54بلین لیٹر سالانہ ہے ۔

پاکستان میں صرف دودھ ہی نہیں بلکہ اس سے تیار شدہ اشیاء کا استعمال بھی کافی حد تک کیا جاتا ہے جیسے کریم ،کھویا ،دہی ،لسی ،پنیر،گھی ،ربڑی ،مکھن اور دیگر اشیاء۔زرا ٹھریے! لازمی نہیں جو دودھ آپ اور میں استعمال کررہے ہوں وہ خالص بھی ہو۔
دودھ میں ملاوٹ دور حاضر کا بہت بڑا نا سور بن چکا ہے اگر بات صرف دودھ میں پانی کی ملاوٹ کی حد تک ہوتی تو بھی قابلِ قبول تھی لیکن دور جدید میں دودھ کی مقدار بڑھانے کے لیے ملاوٹ مافیہ نے ایسے طریقے اختیار کررکھے ہیں کہ عقل دنگ رہ جاتی ہے جس سے خالص دودھ اور ملاوٹ زدہ دودھ میں فرق کرنا مشکل ہوجاتا ہے ۔ترقی پذیر ممالک جن میں انڈیا ،پاکستان ،برازیل اور دیگر ممالک سرِ فہرست ہیں میں دودھ میں ملاوٹ کی شرح بہت زیادہ ہے ۔
دودھ میں جب ملاوٹ کی جاتی ہے تو اس میں پائے جانے والے اجزاء کی شرح بالکل بدل کررہ جاتی ہے ملاوٹ کے نئے طور طریقے خوب رنگ پکڑ چکے ہیں جیسا کہ دودھ میں یوریا ،میلامائن ،فارمالین ،صابن ،ایسڈ ،سوڈیم ہائیڈروآکسائیڈ ،سٹارچ ،سبزیوں سے کشید کردہ تیل ،تالابوں جوہڑوں کا پانی اور پاؤڈر کی شکل میں تیار شدہ مصنوعی دودھ کی ملاوٹ سرِ فہرست ہے ۔ایسے دودھ کا استعمال ہر گز فائدہ مند ثابت نہیں ہوتا بلکہ یہ انسان کو مختلف اقسام کے خطر ناک امراض میں مبتلا کر سکتا ہے ۔
ملاوٹ شدہ دودھ بچوں ،بوڑھوں اور حاملہ خواتین کے لیے زہر قاتل ثابت ہوسکتا ہے ایسے دودھ کے استعمال سے بہت سی بیماریوں جیسا کہ سر درد ،متلی ،قے ،ڈائریا ،آنکھوں کی بینائی متاثر ہونا ،معدہ ،
گردے اور دل کے مسائل ،کینسر اور حتی کہ موت بھی واقع ہو سکتی ہے ۔
جو دودھ آپ اپنی غذائی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے استعمال کر رہے ہیں وہ آپ کے لیے جان لیوا ثابت ہو سکتا ہے ۔یوں تو دودھ میں ملاوٹ کو جاننے کے لیے بہت سے ٹیسٹ موجود ہیں جیسا کہ سوڈا ٹیسٹ(rolic acid test) ,Alklanity,hyperoxide,glucose,starch,fromaline,pulverizedsalt,
urea,ofdetectionfortestdetergent adultraion.milk لیکن بد قسمتی سے یہ تمام ٹیسٹ صرف لیبار ٹریز میں خاص کیمیکلز کی موجودگی میں ہی سر انجام دیے جا سکتے ہیں ۔عام آدمی کے لیے گھر پہ یہ ٹیسٹ کرنا مشکل ہی نہیں تقریباً نا ممکن ہے لیکن متبادل کے طور پر چند ایسے آسان اور سستے طریقے موجود ہیں جن سے آپ گھر بیٹھے دودھ میں ملاوٹ کی شناخت کر سکتے ہیں اور ملاوٹ زدہ دودھ سے خود کو اور اپنے پیاروں کو بچا سکتے ہیں ۔
گھر میں دودھ کی تمام اقدام کی ملاوٹوں کو جا نچنا قدرے مشکل ہے لیکن چند اہم اور ملاوٹ میں زیادہ تر استعمال کی جانے والی اشیاء جیسا کہ پانی ،کیوریا ،سٹارچ ،ڈیٹر جنٹ اور مصنوعی دودھ (synthetic milk)کی پہچان گھر پر کی جا سکتی ہے ۔
اگر دودھ میں پانی کی ملاوٹ کی پڑتال کرنا مقصود ہوتو ایک پلیٹ ترچھی کرکے اس پردودھ کی کچھ مقدار بہائیں اگر دودھ خالص ہوگا تو وہ اپنے پیچھے دودھ کی ایک سفیدلکیر چھوڑتاآئے گالیکن اگر دودھ میں پانی ملا ہو گا کچھ مقدار بہائیں اگر دودھ میں پانی ملا ہو گا تو وہ ایسی کوئی لکیر نہیں چھوڑے گا۔
یوریا کی ملاوٹ کو جانچنے کے لیے دودھ کے دو چمچ کسی پیالی میں ڈالیں اور اس میں ہڑ ہڑ کی دال کا پاؤڈر آدھا چمچ ملا کر ہلائیں بعدازاں دودھ میں لٹمس پیپر کو ڈبوئیں اگر سرخ لٹمس پیپر نیلا ہوجائے یہ واضح نشانی ہے کہ دودھ میں یوریا ملایا گیا ہے ۔ایسے دودھ کا استعمال کسی طور پر کریں لٹمس پیپر کسی بھی سٹیشنری شاپ پر باآسانی دستیاب ہوگا ۔
سٹارچ کی پہچان کے لیے دودھ میں آئیوڈین سلوشن کے دو قطرے ڈالیں اگر دودھ کارنگ نیلا ہو جائے اس کا مطلب ہے کہ دودھ سٹارچ سے ملاوٹ کردہ ہے ۔ڈیٹر جنٹ کی ملاوٹ کو پہچاننے کے لی 5-10ملی لیٹر دودھ میں تقریباً اتنا ہی پانی ملا کر اچھے سے ہلائیں اگر جھاگ بن جائے تو اسکا مطلب ہے کہ دودھ میں ڈیٹر جنٹ ملا ہوا ہے ۔
مصنوعی دودھ کی جانچ پڑتا ل کے لیے آسان طریقہ یہ کہ دودھ میں اپنی انگلیاں ڈبو کر انگلیوں کو اچھے سے رگڑ یں ،رگڑ نے پر اگر چپ چپا محسوس ہوتو یہ اس بات کی نشانی ہے کہ یہ ہرگز دودھ نہیں بلکہ دودھ کے نام پر دھو کہ ہے ۔دودھ خرید تے وقت ہمیشہ کوشش کریں کہ دودھ کسی قابل اعتبار دوکاندار سے خریدا جائے ۔
اس کے علاوہ اوپر دےئے گئے ٹیسٹ کو اپن گھر پر وقتاً فوقتاً کرتے رہا کریں تا کہ آپ باخبر رہیں کہ آپ دودھ کے نام پر دودھ ہی استعمال کر رہے ہیں نا کہ مضر صحت سلوشن ۔مزید یہ کہ فوڈاتھارٹیز کو باقاعدگی سے بازاروں میں بکنے والے کھلے دودھ کے نمونے لے کر لیبا ر ٹریز میں ٹیسٹ کرنے چاہیں تا کہ عوام الناس کو مضر صحت دودھ کے اثرات سے محفوظ رکھا جاسکے کیونکہ” جان ہے تو جہان ہے “۔

تاریخ اشاعت: 2019-02-01

Related Articles

  1. Sehat Mand Kaisay Rahay
  2. Daalon Se Sehat
  3. Sardiyoon Mein Kya Khaye
  4. Tuna Ko Tahafuz Cahia
  5. Diabetes Type 1 Ya Type 2
  6. Roghan Badam Ke Heran Kun Fawaid
  7. Aaj Halwa Kaddu Pakatay Hain
  8. Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil
  9. Mazay Sardi Kay
  10. Yoga Se Zehni Aur Jismani Tandrusti

 

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English Mixed milk poison killer
Rabi Shabir
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English Due to the importance of eating nutritional value, milk and its items are an essential component of the human diet. In proteins, fat carbohydrates, vitamins, and minerals are found in sufficient amounts. Small milk and children are older. Useful food is considered for people because of it easily digestive.

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English There is also plenty of essential amino acids available for the growth of nutritious diabetes. Absolute milk is the best diet for all ages and sex people. Minerals found in cereals are very important for the growth and strengthening of calcium bones. Pakistan is currently the fourth largest country in terms of milk production in the world. Here, the production capacity of milk is approximately 54 billion liters.

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English In Pakistan, milk is not used only but also the use of the items made by it, cream, lost, dairy, lace, cheese, curd, rubber, butter, and other items. It is not mandatory that you and the milk I am using are also pure.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English Milk mixture has become a very uncomfortable period, if it was only acceptable to the mixture of milk in the water, but in order to increase the amount of milk in the modern era, the mulberry mafia has adopted such methods that It is difficult to distinguish pure milk and mixed milk. In countries where India,

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English Pakistan, Brazil, and other countries are headed, it is very high for milk mixing.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English When mixed in milk, the rate of ingredients in it is changed exactly as the new colors of the embryo have taken shape, such as milk in uranium, melamine, formaline, soap, acid, sodium hydroxide, starch, Vegetable strained oils, salts of jaw water and powder form is the head of the synthetic milk. This type of milk is not used as beneficial every time, but it can make humans suffer from different types of dangers. Is.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English Poor milk can be poisonous killer for children, elderly and pregnant women, such as milk use can lead to many diseases such as headaches, nausea, vomiting, diarrhea, blindness, blindness,
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English Kidney and heart problems, cancer and even death may occur.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English The milk that you are using to fulfill your nutritional needs can prove to be known to you. There are many tests to know the mixture of milk in milk such as soda test, Alkalinity, hyperoxide, glucose, starch, formalin, pulverized salt,
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English urea, of detection for test detergent adulteration. milk But unfortunately, all tests can be performed only in the presence of special chemicals in labyrinths only. It is not difficult for a man to test it at home, almost impossible,

Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English but alternatively But there are some simple and cheap ways that you can identify mixture in milk sitting at home and save yourself and your loved ones from mixed milk.
It is very difficult to get all the milk mixtures mixed in but most importantly used items in water, cure, starch, dealer ginger, and synthetic milk are being used at home. Can be
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English If it is important to examine the mixture of milk in the milk, then a plate should be mixed and add some amount of alcohol to it, if it is pure then it will leave white milk behind it. If you have water in the milk if the milk is mixed in the milk If so, he will not leave any such line.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English To check the uranium mixture, put two spoons of milk in a bowl and add powdered pulp half a spoon, and then add Olympus paper in milk if the red litmus paper becomes blue, it is clear that it is clear that milk in urine It is mixed. Use this milk in any way Litmus paper will be available on any stationery shop.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English For Starach’s Identification, take two drops of iodine solution in milk if milk-curing becomes blue, it means that the milk is mixed with starch. The identification of the mixture of the liver is approximately 5-10 liters of milk in the milk. If you have foam in it, then it means milk is found in the divergent gut.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English The easy way to check artificial milk is to rub your fingers in the milk and friction the fingers with good, if the frog looks like a chip, then it is a sign that it is not milk but it is noted in milk. That is, always try buying and selling milk with a trusted shopkeeper.
Milawat Shuda Doodh Zeher Qaatil Health Tips In English In addition, keep the tests given above at your own home so that you keep in mind that you are using milk on the name of milk, non-hazardous health solutions. Moreover, Foodstuffs are regularly selling the market Take an example of open milk samples to test in algebra rays so that the masses can be protected from the effects of nutritious health and milk, because “it is life.”

Date published: 2019-02-01

Source Urdupoint...

Tags
Show More

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Close